چند عادات جو آپ کو امیر بنا سکتی ہیں some habits that can make you rich urdu

چند عادات جو آپ کو امیر  بنا سکتی ہیں    some habits that can make you rich urdu
چند عادات جو آپ کو امیر  بنا سکتی ہیںurdu some habits that can make you rich
چند عادات جو آپ کو امیر  بنا سکتی ہیںurdu some habits that can make you rich
یہ سوال بہت سے لوگوں کے دماغ میں ہوتا ہے ، امیر تو ہر کوئی بننا چاہتا ہے، لیکن بہت کم لوگ امیر بنتے ہیں۔ آخر اس کی وجہ کیا ہے؟کیوں ہر انسان امیر نہیں ہو سکتا ؟ کیسے کچھ لوگ غریبی سے نکل کر امیر لوگوں میں شامل ہو جاتے ہیں ۔اگر آپ بھی امیر بننا چاہتے ہیں اور آپ چاہتے ہیں آپ کے پاس کروڑوں کے حساب سے پیسہ ہو  تو آپ کو چند ایک باتوں کا خیال رکھنا ہو گا۔ اگر آپ ان باتوں پر عمل کرتے ہیں تو آپ کو امیر بننے سے کوئی نہیں روک سکتا۔
نوکری چھوڑیں اور کاروبار کریں
دنیا میں کوئی بھی ایسا انسان نہیں ہےجو نوکری کرتا ہو اور و ہ خوشحال ہو اور اس کے پاس پیسے کی فراوانی بھی ہو تو ایسا نا ممکن لگتا ہے۔ اگر ایسا ہے تو آپ امیر بننے کی خواہش لیے کیوں نوکری کر رہے ہیں ۔ اگر آپ سٹوڈنٹ ہیں یا پھر آپ کے پاس سرمائے کی کمی ہے تو آپ شروعات میں نوکری کر سکتے ہیں جب آپ کے پاس کاروبار کرنے کے لیے سرمایہ اکھٹا ہو جائے تو اپنا کاروبار شروع کر دیں۔یہ ضروری نہیں کہ آپ کسی بڑی فیکٹری یا پھر کمپنی بنا کر ہی بزنس کر سکتے ہیں آپ ایک چھوٹے کاروبار سے شروعات کر کے بھی اس کو بڑے کاروبار میں بدل سکتے ہیں۔
بزنس سکلز بڑھانا
ایک غریب انسان  امیر بن جائے اور اس کے پاس سے وہ سب کچھ چلا جائے جو اس نے محنت کر کے حاصل کیا تھا ایسی صورت حال میں دو آپشن ہوتے ہیں ایک روتے  رہیں اور اپنے آپ کو کوستے رہیں جبکہ دوسرا آپشن ہمت کر کے صفر سے شروع کریں۔غریبی سے امیری تک کا سفر جو انسان کرتا ہے وہ مثبت  سوچتا ہے ۔ ایک امیر انسا ن سے سب کچھ چلے جانے کے بعد وہ دوبارہ محنت  کر کے سب کچھ حاصل کر لیتا ہے آخر اس کی وجہ کیا ہے؟
مثال کے طور پر ہم بچپن میں سائیکل چلانا سیکھتے  رہے ہیں لیکن گرنے سے ڈر بھی لگتا تھا  جب ہم سائیکل چلانا سیکھ لیتے ہیں تو ہمیں ڈر نہیں لگتا اورہم پورے اعتماد سے سائیکل چلا لیتے ہیں ۔کاروبار بھی اسی طرح کا ایک کام ہے یہ بھی چلانا آپ کو سیکھنا پڑتا ہے  اور سیکھنے میں ٹائم دینا ہے ، اور تب تک محنت سے پوری کوشش کرنا ہو گی جب تک  اسے کامیابی سے چلانا سیکھ نہیں لیتے، اگر آپ ناکام بھی ہوتے ہیں تو کوئی بات نہیں پھر سے اُٹھیں اور دوبارہ کوشش کریں کیونکہ بزنس چلانا تو آپ کو آتا ہے بس تھوڑی سی اور کوشش اور اس کے بعد کامیابی ہی کامیابی ہے۔اگر آپ کاروبار کرنا سیکھ گئے تو آپ کو امیر بننے سے کوئی نہیں روک سکتا۔
تخلیقی سوچ
دنیا میں پہلے موبائل نہیں تھا آج ہر کسی کے پاس موبائل ہے ۔ اس کی وجہ ایک ہی انسان ہے اگر وہ ایسی کسی چیز کے بنانے کے بارے میں نا سوچتا تو آج ہمارے پاس موبائل نا ہوتے ، اگر آپ کے دماغ میں ایسی کسی چیز کی سوچ ہے جس سے لوگوں کو فائدہ حاصل ہو سکتا ہے تو دیر مت کریں اس آئیڈیا پر کام شروع کر دیں۔ اگر پہلے سے موجود چیزیں تھوڑی ایڈوانس کر دی جائیں تب بھی تخلیقی سوچ ہے مثال کے طور پر پہلے کمپیوٹر ایک کمرے میں آتا تھا اب آپ ایک چھوٹے بیگ میں ڈال کر کہیں بھی لے جا سکتے ہیں۔ اگر آپ بھی ایسی تخلیقی سوچ رکھتےہیں تو اچھی بات ہے۔
پیسوں کا بہترین استعمال سیکھیں
جو  انسان پیسوں سے پیسے بنانا سیکھ لے وہ امیر بن جاتا ہے اور جو ہاتھ میں موجود پیسوں کو صرف خرچ کرتا ہے وہ کبھی بھی امیر نہیں بن سکتا۔ آپ کو اپنے دماغ میں ایسا آئیڈیا لانا ہو گا  جس کی مدد سے آپ ایسی جگہ پیسے کو لگائیں جہاں سے آپ کا پیسہ ڈبل ہو جائے۔
دوسروں سے الگ سوچیں
اگر ایک محلے یا گلی میں پچاس لوگ رہتے ہیں  اور  بیس کسی فیکٹری میں کام کرتے ہیں  باقی تیس بچ جانے والے  بھی کوشش کریں گے ہم بھی فیکٹری میں کام کریں ۔ زیادہ تر لوگوں وہی کام کرنا پسند کرتے ہیں جو زیادہ تر لوگ کر رہے ہوتے ہیں۔جو لوگ سرکاری نوکری کر رہے ہوتے ہیں ان کی کوشش ہوتی ہے ان کے بچے بھی سرکاری نوکری کریں ، یعنی وہ بچوں کو یہ سوچ دے رہے ہیں ہم تو پید ا ہی نوکری کرنے کے لیے ہوئے ہیں، کاروبار کرنا ہمارے بس کی بات نہیں ہے۔
ایک بزنس مین اپنے بچوں کو کہتا ہے پہلے پڑھائی کرو اس کے بعد اپنا بزنس شروع کرو، تم دوسرے لوگوں کو نوکری  دینے کے لیے پیدا ہوئے ہو نا کہ نوکری کرنے کے لیے آئے ہو۔ یہ بھول جائیں دوسرے آپ کے بارے میں کیا سوچتے ہیں  ، آج سے مثبت سوچنا شروع کر دیں کامیابی آپ کا مقدر بن جائے گی۔

Post a Comment

0 Comments