پاکستان میں کاروبارشروع کرنا چاہتا ہوں ، کونسا کاروبار بہترین ہے

پاکستان میں کاروبارشروع کرنا چاہتا ہوں ، کونسا کاروبار بہترین ہے
پاکستان میں کاروبارشروع کرنا چاہتا ہوں ، کونسا کاروبار بہترین ہے


پاکستان میں کاروبار  شروع کرنا چاہتا ہوں ،  کونسا کاروبار بہترین ہے
یہ سوال  بزنس آئیڈیا ز کے  مختلف گروپوں  میں دیکھنے کو ملتے ہیں، پاکستان میں کونسا کاروبار اچھا رہے گا؟  کاروبار کی شروعات کیسے کریں ؟ یہ سوالات پوچھنے والے زیادہ تر لوگ  ملک سے باہر روزگار کے سلسلے میں    موجود ہوتے ہیں، انہیں پاکستان کی مارکیٹ  کے بارے میں کچھ زیادہ معلومات نہیں ہوتی ،  جس کی وجہ سے یہ سوالا ت عام ہیں۔



مجھ سے بھی کئی دوست رشتہ دار پوچھتے ہیں  یار پاکستان میں کونسا  کاروبار کیا جا سکتا ہے؟ مجھے ملک سے باہر کافی عرصہ گزر چکا ہے ، کسی کو پانچ سال کسی کو دس سال۔۔۔اب اپنے گھر میں رہ کر کوئی کاروبار شروع کرنا چاہتا ہوں، زیادہ تر لوگ یہی سوچتے ہیں میں ملک سے باہر ہوں تو اپنے کسی بھائی کو کاروبار بنا کر دے دیتا ہوں وہ کاروبار چلائے گا ، جب کاروبار کامیاب ہو جائے گا تو میں جاب چھوڑ کر کاروبار کرنا سنبھال  لوں  گا۔

 میں سمجھتا ہوں یہاں سب سے بڑی غلطی کر دی جاتی ہے ، کوئی بھی  بندہ اگر کاروبار کرنا چاہتا ہے تو اسے خود سے اس کاروبار کو وقت دینا ہوگا، وہ کسی دوسرے پر اعتبار نہیں کر سکتا ، آپ خود سے دیکھ سکتے ہیں آپ کو اپنے اردگر د ایسی بہت سی مثالیں ملیں گی  جنہوں نے اپنی جمع پونجی سے اپنے کسی بھائی یا قریبی رشتہ دار کو کاروبار شروع کروایا ہو اور وہ بعد میں اس کو پچھتایا  نا  ہو۔

یہ ضروری نہیں کہ جس بندے پر آپ نے بھروسہ کیا ہو  وہ سارے پیسے کھا گیا ہو، اس کی کئی وجوہات ہو سکتی ہیں  ہو سکتا  ہے  اس نے پوری کوشش کی ہو  لیکن  وہ کامیاب نا ہو  پایا ہو ، ہو سکتا ہے اس کاروبا ر میں اس کی دلچسپی نہیں تھی اور اس سے زبردستی یہ کاروبار کروایا جا رہا ہو جس کی وجہ سے کاروبار اپنے شروعاتی چند ماہ میں نا کام ہو گیا ہو۔



 کوئی بھی شخص جو کاروبار کرنا چاہتا  ہو خواہ وہ پاکستان میں ہو یا کسی اور ملک میں اس کو سب  پہلے مارکیٹ ریسرچ ضرور کرنی چاہیے، جس جگہ وہ کاروبار کرنا چاہتا ہے  اس کے بارے میں اس کے پاس مکمل معلومات ہونی چاہیے، کوشش کرنی چاہیے وہ کاروبار کریں جس کا آپ کو تجربہ ہو، جب تک کاروبار میں ذاتی طور پر دلچسپی نہیں  لی جائے گی کاروبار کے کامیاب ہونے کے چانس بہت کم ہیں۔

زیادہ تر کی یہی سوچ ہوتی ہے یار بہت کرلی نوکری  اب سکون سے اپنا کاروبار کرتے ہیں  کسی کو جواب  دہ نہیں ہونا  پڑے گا، کاروبار میں آپ خود مالک ہوتے ہیں کسی کو جواب دہ نہیں ہونا ہوتا،   لیکن آپ کو نوکری سے زیادہ ذمہ داری ، محنت سے کام کرنا پڑتا ہے، نوکری  کرنے والے حضرات ذیادہ چھٹیاں کرنے کے عادی ہوتے ہیں جب  کہ  اپنے کاروبار میں کم سے کم چھٹیاں کرنا پڑتی ہیں، اور گھڑی دیکھ کر آپ کام نہیں کر سکتے کہ کب  ٹائم پورا ہو گا اور میں چھٹی  کر کے میں گھر جاؤں گا۔

کسی بھی کاروبار کے شروعاتی دنوں  میں اخراجات کو کم سے کم  رکھنا چاہیے  اگر آپ شروعات میں اخراجات کو کنٹرول نہیں کریں گے تو اس کی وجہ سے آپ کو کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔  جو کاروبار اپنے شروعات چند سالوں میں ناکام ہوتے ہیں ان کی ناکامی کی ایک بڑی وجہ سرمائے کی کمی ہے۔

Post a Comment

0 Comments